تھام اے دل اب وہ دامنِ سلطانِ اولیا

20 ستمبر 2018 ء

تھام اے دل اب وہ دامنِ سلطانِ اولیا
یعنی حسینؓ ابنِ علیؓ جانِ اولیا

کچھ اور ذوقِ جامِ شہادت ہے ان کے بعد
ہے اور شوقِ مستئِ عرفانِ اولیا

وہ صاحبِ مقامِ نبیؐ و علیؓ ہوئے
وہ فخرِ انبیاؑ ہیں وہی شانِ اولیا

آئینۂِ جمالِ الہی ہے ان کی ذات
اس واسطے ہیں قبلۂ ایمانِ اولیا

ہے حشر میں نیازؔ کو خواہش حسینؓ کی
ہوں اولیا کے ساتھ محبانِ اولیا

منظوم اردو ترجمہ

اے دل بگیر دامنِ سلطانِ اولیا
یعنی حسینؓ ابنِ علیؓ جانِ اولیا

ذوقے دگر بجامِ شہادت ازو رسید
شوقے دگر بمستئِ عرفانِ اولیا

چوں صاحبِ مقامِ نبیؐ و علیؓ ست او
ہم فخرِ انبیاؑ شدہ ہم شانِ اولیا

آئینۂِ جمالِ الٰہی ست صورتش
زانرو شدہ ست قبلۂِ ایمان اولیا

دارد نیازؔ حشرِ خود امید با حسینؓ
با اولیاست حشرِ محبانِ اولیا

شاہ نیازؔ بریلویؒ

راحیلؔ فاروق

پنجاب (پاکستان) سے تعلق رکھنے والے اردو شاعر۔

یہ کلام اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on pinterest
Share on reddit
Share on linkedin
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لطفِ سخن کچھ اس سے زیادہ

خوش آمدید۔ آپ کی یہاں موجودگی کا مطلب ہے کہ آپ کو اردو گاہ کے جملہ قواعد و ضوابط سے اتفاق ہے۔ تشریف آوری کا شکریہ!