جب جنوں پر سراب ہنستا ہے

اردو شاعری

جب جنوں پر سراب ہنستا ہے
خود بھی خانہ خراب ہنستا ہے

ہنستے ہیں ہم حجاب پر ان کے
ہم پر ان کا حجاب ہنستا ہے

زندگی ہے گریز پا تو ہو
پھیر کر منہ شباب ہنستا ہے

گو حقیقت شناس ہیں دونوں
آنکھ روتی ہے خواب ہنستا ہے

کون روتا ہے جا کے زم زم پر
کون پی کر شراب ہنستا ہے

اک تبسم ہے ضبط کے لب پر
اک ہنسی پیچ و تاب ہنستا ہے

آنسوؤں کا جواب ہے لیکن
ہنس کہ تو لاجواب ہنستا ہے

غم نہ ہو جو ردیف میں راحیلؔ
بےحد و بےحساب ہنستا ہے

راحیلؔ فاروق

پنجاب (پاکستان) سے تعلق رکھنے والے اردو شاعر۔

یہ کلام اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on pinterest
Share on reddit
Share on linkedin
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لطفِ سخن کچھ اس سے زیادہ

ہم روایت شکن روایت ساز

پر

خوش آمدید!

باتیں ہماری یاد رہیں گی۔۔۔

تنبیہ